حقوق النبی صلی اللہ علیہ وسلم

حقوق النبی صلی اللہ علیہ وسلم
حضرت انس بن مالک فرماتے ہیں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا تم میں سے کوئی آدمی اس وقت تک ( کامل) مومن نہیں بن سکتا جب تک کہ میں اس کو اس کے باپ اس کی اولاد اور تمام لوگوں سے زیادہ محبوب نہ بن جاوں ۔ ( صیح بخاری و صیح مسلم)
ایما ن کی مٹھاس
حضرت انس رضی اللہ تعالیٰ عنہ راوی ہیں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا“ جس آدمی میں یہ تین چیز یں ہوں گی وہ ان کی وجہ سے ایمان کی حقیقی لزت سے لطف اندوز ہوگا اول یہ کہ اسے اللہ اور اس کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کی محبت دنیا کی تمام چیزوں سے زیادہ ہو، دوسرا یہ کہ کسی بندہ سے اس کی محبت محض اللہ (کی خوشنودی) کے لیے ہو۔ تیسرے یہ کہ جب اسے اللہ نے کفر کے اندھیرے سے نکال کر ایمان واسلام کی روشنی سے نوازدیا ہے تو اب وہ اسلام سے پھر جانے کو اتنا ہی برا جانے جتنا آگ میں ڈالے جانےکو۔ صیح بخاری و صیح مسلم)
حضرت عباس بن عبدالمطلب فرماتے ہیں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ و سلم نے فرمایا جس آدمی نے اللہ تعالی کو اپنا پروردگار اسلام کو اپنا دین اور “ محمد (صلی اللہ علیہ وسلم ) کو اپنا رسول خوشی سے مان لیا تو اس نے ایمان کا ذائقہ چکھ لیا۔“ صیح مسلم )
ایمان کی اہمیت
حضرت ابوہکریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ فرماتے ہیں کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا۔ اس ذات کی قسم جس کی قبضہ میں محمد (صلی اللہ علیہ وسلم ) کی جان ہے ! اس امت میں سے جو آدمی بھی خواہ وہ یہودی ہو یا نصرانی، میری نبوت کی خبر پا ئے اور میری لائی ہوئی شریعت پر ایمان لائے بغیر مر جائے ، وہ دوزخی ہے۔“ (صیح مسلم)

Facebook Comments

اپنا تبصرہ بھیجیں