pakistan breaking updates 31

وزیراعظم پاکستان کی صاحبزادی مریم نواز کی بڑی خبر- جانئیے پوری بات

وزیراعظم پاکستان کی صاحبزادی مریم نواز سپریم کورٹ کے حکم پر پاناما دستاویزات کے معاملے کی تحقیقات کرنے والی ٹیم کے سامنے بیان ریکارڈ کروانے کے لیے فیڈرل جوڈیشل اکیڈمی پہنچ گئی ہیں۔
یہ پہلا موقع ہے کہ مشترکہ تحقیقاتی ٹیم نے مریم نواز کو بلایا ہے۔ مریم نواز شریف نے چار جولائی کو ایک ٹویٹ میں کہا تھا کہ “وہ قانون کی پاسداری کرتے ہوئے جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہوں گی۔ ایک اور ٹویٹ میں انھوں نے کہا کہ ‘کل ملاقات ہوتی ہے، انشااللہ۔”
pakistan breaking updates
اسی مناسبت سے دارالحکومت اسلام آباد میں سخت حفاظتی انتظامات بھی کیے گئے ہیں۔ خیال رہے کہ جے آئی ٹی کی جانب سے مریم نواز کو جو سمن بھیجا گیا تھا اس میں کہا گیا ہے کہ وہ پانچ جولائی کو 11 بجے پیش ہوں اور انھیں اپنے ہمراہ دستاویزات اور ریکارڈ لانے کو کہا گیا ہے۔
اس سمن میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ اگر مریم نواز مشترکہ تحقیقاتی ٹیم کے سامنے پیش نہیں ہوتیں تو انھیں قانون کے مطابق کارروائی کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے تاہم جو سمن بھیجے گئے ہیں ان میں واضح نہیں کہ انھیں کس حیثیت سے طلب کیا جا رہا ہے۔
سپریم کورٹ نے جے آئی ٹی کو دس جولائی کو اپنی تحقیقات مکمل کر کے حتمی رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا ہوا ہے۔
اس سے قبل حسن نواز تین جولائی کو جبکہ حسین نواز چار جولائی کو ایک بار پھر جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہوئے تھے۔
وزیراعظم کے صاحبزادے حسین نواز اب تک چھ مرتبہ جبکہ حسن نواز تین مرتبہ جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہو چکے ہیں۔
ان کے علاوہ وزیراعظم نواز شریف ان کے بھائی شہباز شریف اور داماد کیپٹن(ر) صفدر ایک ایک بار جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہوئے ہیں۔

pakistan breaking updates
لندن میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف نے کہا تھا کہ” پاناما کیس کی تحقیقات کرنے والی مشترکہ تحقیقاتی ٹیم کو ان کے خلاف الزام کی حد تک بھی کچھ نہیں ملا۔”

Facebook Comments

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں